اسلام آباد (ویب ڈیسک) فرح خان اور ان کے شوہر احسن جمیل گجر کیخلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات اور منی لانڈرنگ کیس میں وکیل نے فرح خان اور ان کے4 ملازمین کی طرف سے تحریری جواب جمع کرا دیا۔نیب نے چاروں ملازمین کو طلب کر رکھا تھا لیکن انہوں نے وکیل کے ذریعے جواب جمع کرایا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق ایڈووکیٹ اظہر صدیق بطور وکیل فرح خان آج نیب میں

پیش ہوئے اور جواب جمع کرایا۔نیب میں جمع کرائے گئے تحریری جواب میں وکیل کا کہنا ہے کہ نیب ایک ایسے مقدمے میں طلب کر رہا ہے جو اس کے دائرہ اختیار میں نہیں لہٰذ ا نوٹس جاری کرنے کا عمل غیر قانونی ہے۔ وکیل نے جمع کرائے گئے جواب میں کہا ہے کہ فرح خان کی شادی

2003 میں ہوئی، ان کے شوہر احسن جمیل گجر 1999میں چیئرمین ضلع کونسل تھے لیکن فرح شہزادی کبھی پبلک آفس ہولڈ ر نہیں رہی۔ مزید کہا کہ نیب نوٹس نہ صرف غیر قانونی، بلکہ اختیارات سے تجاوز ہے، فرح خان پبلک آفس ہولڈر نہیں رہیں، نہ سرکاری

دفتر میں ملازمت کی۔پہلے اپنے دائرہ اختیار کا تعین کریں اور پھر نوٹس جاری کریں۔ ادھر سماء ٹی وی کا کہناہے کہ طلبی کے باوجود چاروں افراد پیش نہیں ہوئے اور جواب میں موقف اپنایا کہ طلبی غیر قانونی ہے، ملازمین پبلک آفس ہولڈر نہیں اور ان میں سے ایک ملازم فرح خان کے بچوں کو ٹیوشن پڑھاتا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں